About the author

Related Articles

One Comment

  1. 1

    محمد طارق راحیل

    جس قوم کے حکمران نا اہل بے حس اپنے منصب کی اہمیت سے بے بہرہ اللہ کے سامنے جوابدہی کے خوف سے آزاد ہوں طاقت جن کا مقصد حکمرانی جن کا نصب العین اور دولت جن کا خدا ہو ایسے ملکوں میں یہی رواج روز و شب دکھائی دیا جاتا ہے
    عوام بھی بے حس ہے خواص کیا کیا کہنا
    اسلامی اقدار کو بھولنے والوں اسلامی معیار زندگی کو ترک کرنے والوں دکھاوے اور ریاکاری کے سیلاب میں بہنے والوں میں اور بس میں کے لئے لڑنے والوں کے ساتھ ایسے ہی ہوا جاتا ہے
    حقوق اللہ کی کیا نبہانا یہاں حقوق العباد پورے کیا ان کو پامال کیا جاتا ہے اللہ کو مانتے ہیں اللہ کی نہیں مانتے رسول کو مانتے ہیں پر رسول کی نہیں مانتے ماننے کی حد یہاں کے کٹ مریں گے کوئی ان کا نام کے ساتھ یا لگائے یا نہیں اس بات کے لئے مگر انہوں نے کہا کیا وہ بھول گئے

    ؎ خدا نے آج تک اس قوم کی حالت نہیں بدلی

    نہ ہو جس کو خیا ل آپ اپنی حالت کے بدلے کاآمین

  2. 2

    محمد طارق راحیل

    جس قوم کے حکمران نا اہل بے حس اپنے منصب کی اہمیت سے بے بہرہ اللہ کے سامنے جوابدہی کے خوف سے آزاد ہوں طاقت جن کا مقصد حکمرانی جن کا نصب العین اور دولت جن کا خدا ہو ایسے ملکوں میں یہی رواج روز و شب دکھائی دیا جاتا ہے
    عوام بھی بے حس ہے خواص کیا کیا کہنا
    اسلامی اقدار کو بھولنے والوں اسلامی معیار زندگی کو ترک کرنے والوں دکھاوے اور ریاکاری کے سیلاب میں بہنے والوں میں اور بس میں کے لئے لڑنے والوں کے ساتھ ایسے ہی ہوا جاتا ہے
    حقوق اللہ کی کیا نبہانا یہاں حقوق العباد پورے کیا ان کو پامال کیا جاتا ہے اللہ کو مانتے ہیں اللہ کی نہیں مانتے رسول کو مانتے ہیں پر رسول کی نہیں مانتے ماننے کی حد یہاں کے کٹ مریں گے کوئی ان کا نام کے ساتھ یا لگائے یا نہیں اس بات کے لئے مگر انہوں نے کہا کیا وہ بھول گئے

    ؎ خدا نے آج تک اس قوم کی حالت نہیں بدلی

    نہ ہو جس کو خیا ل آپ اپنی حالت کے بدلے کاآمین

Leave a Reply

2019 Powered By WordPress, NICE By WebHouse